ماں آخری وقت میں بیٹے کو پکارتی رہ گئی اور بیٹا راستے میں ڈکیتی کا شکار ہوتا رہا۔۔ بوڑھی ماں کے مرنے کے بعد نوجوان کا ایسا خط جس نے سب کی آنکھیں نم کردیں

“میری ماں سینے کے درد میں مجھے پکارتی رہ گئی مگر میں سڑک پر ڈکیتی کا نشانہ بنتا رہا۔ جب گھر پہنچا تو بہت دیر ہوچکی تھی اور ماں آخری وقت میں تڑپ تڑپ کر مجھے پکارتے دنیا سے چا چکی تھی۔ ماں کے مرنے کے بعد اب میں اس بھری دنیا میں اکیلا رہ گیا ہوں“

یہ کہنا لاروارث شہر کراچی کے ایسے بدنصیب شخص کا ہے جس نے حال میں ہی اپنی ماں کو صرف اس لئے کھو دیا کیوں کہ وہ ایسے شہر میں رہتا ہے جہاں پر قانون نافذ کرنے والے ادارے بے بس اور شہری غنڈوں کے ہاتھوں یرغمال بنے ہوئے ہیں۔

بیٹا گھر آجاؤ سینے میں بہت درد ہے

سوشل میڈیا پر کل رات سے وائرل ہونے والے اس خط میں نوجوان کا نام نہیں بتایا گیا البتہ یہ ضرور لکھا ہے کہ وہ گلشن کا رہائشی ہے جہاں چند دن پہلے وہ اور اس کی والدہ رہتے تھے۔ ایک دن وہ گھر سے اپنے دفتر لیاری جانے نکلا تو راستے میں اس کی ماں نے فون کر کے کہا “بیٹا جلدی گھر آجاؤ میرے سینے میں بہت درد ہے“

منتیں کرتا رہا ایک فون کرنے دو

بیٹے نے بے بسی سے طویل راستہ دیکھا اور سوچا کہ مدد کے لئے پڑوسی کو ماں کے پاس بھیج دے۔ یہی سوچ کر اس نے موبائل فون جیب سے نکالا ہی تھا کہ دو ڈکیتوں نے گن پوائنٹ پر اس سے موبائل اور پرس چھین لیا۔ بیٹا ڈکیتوں سے منتیں کرتا رہا کہ میری ماں مر جائے گی صرف ایک فون کال کر لینے دو لیکن ڈکیتوں کو اس پر رحم کیوں آتا؟

آخر میرا کیا قصور تھا؟

نوجوان کا کہنا ہے کہ گھر پہنچا تو میری دنیا لٹ چکی تھی۔ پکارنے والی ماں اب دنیا میں نہ رہی تھی۔ میں اب اپے گھر میں اکیلا رہتا ہوں لیکن سمجھ نہیں آتا کہ میرا کیا قصور تھا جو میں نہ آخری وقت میں ماں کے پاس پہنچ سکا نہ ہی ان کی جان بچا سکا۔

Maan Akhri Waqt Mein Bete Ko Pukarti Rahi

Discover a variety of News articles on our page, including topics like Maan Akhri Waqt Mein Bete Ko Pukarti Rahi and other health issues. Get detailed insights and practical tips for Maan Akhri Waqt Mein Bete Ko Pukarti Rahi to help you on your journey to a healthier life. Our easy-to-read content keeps you informed and empowered as you work towards a better lifestyle.

By Khush Bakht  |   In News  |   0 Comments   |   2668 Views   |   13 Oct 2022
About the Author:

Khush Bakht is a content writer with expertise in publishing news articles with strong academic background. Khush Bakht is dedicated content writer for news and featured content especially food recipes, daily life tips & tricks related topics and currently employed as content writer at kfoods.com.

Related Articles
Top Trending
COMMENTS | ASK QUESTION (Last Updated: 29 May 2024)

ماں آخری وقت میں بیٹے کو پکارتی رہ گئی اور بیٹا راستے میں ڈکیتی کا شکار ہوتا رہا۔۔ بوڑھی ماں کے مرنے کے بعد نوجوان کا ایسا خط جس نے سب کی آنکھیں نم کردیں

ماں آخری وقت میں بیٹے کو پکارتی رہ گئی اور بیٹا راستے میں ڈکیتی کا شکار ہوتا رہا۔۔ بوڑھی ماں کے مرنے کے بعد نوجوان کا ایسا خط جس نے سب کی آنکھیں نم کردیں ہر کسی کے لیے جاننا ضروری ہیں کیونکہ یہ ایک اہم معلومات ہے۔ ماں آخری وقت میں بیٹے کو پکارتی رہ گئی اور بیٹا راستے میں ڈکیتی کا شکار ہوتا رہا۔۔ بوڑھی ماں کے مرنے کے بعد نوجوان کا ایسا خط جس نے سب کی آنکھیں نم کردیں سے متعلق تفصیلی معلومات آپ کو اس آرٹیکل میں بآسانی مل جائے گی۔ ہمارے پیج پر کھانوں، مصالحوں، ادویات، بیماریوں، فیشن، سیلیبریٹیز، ٹپس اینڈ ٹرکس، ہربلسٹ اور مشہور شیف کی بتائی ہوئی ہر قسم کی ٹپ دستیاب ہے۔ مزید لائف ٹپس، صحت، قدرتی اجزاء اور ماڈرن ریمیڈی کے فوڈز میں موجود ہے۔