درد سے تڑپتی حاملہ عورت کو 10 سیکنڈ میں آرام آجاتا ہے۔۔ بغیر درد کے ڈلیوری کیسے ممکن ہے؟ ماہرین کی رائے

ماں بننا کسی بھی عورت کی زندگی کا سب سے خوشگوار مرحلہ ہوتا ہے لیکن بہت سی لڑکیاں اور خواتین خوفزدہ ہوتی ہیں کہ جانے انھیں کس تکلیف سے گزرنا پڑے گا۔ ایسی خواتین جو حمل سے گزر رہی ہیں انھیں یہ مضمون لازمی پڑھنا چاہئے تاکہ بغیر درد کے زچگی کے عمل سے گزرنے کے بارے میں وہ اپنے ڈاکٹر سے رجوع کرسکیں۔

“اسپتال میں جس وقت حاملہ عورت زچگی کے مرحلے کے قریب ہوتی ہے اور اسے شدید درد محسوس ہوتا ہے اس وقتambulatory epidural کے ذریعے اسے صرف ١٠ سیکنڈز میں آرام آسکتا ہے۔“

یہ کہنا ہے ڈاکٹر مظہر عاصم مونگا کا جو کینیڈا سے آئے ہیں اور قطر کے شاہی خاندان کے ذاتی معالج ہیں۔ ڈاکٹر مظہر کنسلٹنٹ اینیستھیٹسٹ ہیں۔ مرہم ٹی وی پر اس حوالے سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر مظہر کا کہنا تھا کہ جب حاملہ خواتین اسپتال میں رجسٹریشن کے لئے آتی ہیں اسی وقت ان کی ہسٹری اور ٹیسٹ وغیرہ کروانے کا عمل شروع کردیا جاتا ہے ساتھ یہ انھیں مستقبل میں پیش آنے والے مرحلوں سے بھی آگاہ کردیا جاتا ہے۔

حاملہ خاتون جب زچگی کے لئے اسپتال آتی ہیں اس وقت جب ان کا درد انتہا پر پہنچ جائے اس وقت انھیں ambulatory epidural دیا جاتا ہے جس سے سیکنڈز میں درد کا اثر زائل ہوجاتا ہے البتہ زچگی کا مرحلہ جاری رہتا ہے۔ یہ طریقہ فرانس میں کافی مقبول ہوچکا ہے۔

ڈاکٹر مظہر کے مطابق اس ٹریٹمنٹ کے بعد حاملہ خاتون کو چلایا بھی جاتا ہے جس کا مقصد یہ ہوتا ہے کہ بچہ مزید نیچے آجائے اور پھر تھوڑی دیر بعد ڈلیوری کا عمل ممکمل ہوجاتا ہے۔ حیرت انگیز طور پر اس طریقہ کار سے بچے یا ماں کو کوئی نقصان نہیں پہنچتا اور نہ ہی ماں کو درد ہوتا ہے۔ یہاں تک کہ اگر کسی وجہ سے سی سیکشن کی ضرورت پیش آجائے اس وقت بھی حاملہ عورت کو تکلیف کا احساس نہیں ہوتا۔

Hamla Aurat Ko 10 Second Mein Aram A Jata Hai

Discover a variety of Health and Fitness articles on our page, including topics like Hamla Aurat Ko 10 Second Mein Aram A Jata Hai and other health issues. Get detailed insights and practical tips for Hamla Aurat Ko 10 Second Mein Aram A Jata Hai to help you on your journey to a healthier life. Our easy-to-read content keeps you informed and empowered as you work towards a better lifestyle.

By Khush Bakht  |   In Health and Fitness  |   0 Comments   |   44923 Views   |   14 Nov 2022
About the Author:

Khush Bakht is a content writer with expertise in publishing news articles with strong academic background. Khush Bakht is dedicated content writer for news and featured content especially food recipes, daily life tips & tricks related topics and currently employed as content writer at kfoods.com.

Related Articles
Top Trending
COMMENTS | ASK QUESTION (Last Updated: 22 May 2024)

درد سے تڑپتی حاملہ عورت کو 10 سیکنڈ میں آرام آجاتا ہے۔۔ بغیر درد کے ڈلیوری کیسے ممکن ہے؟ ماہرین کی رائے

درد سے تڑپتی حاملہ عورت کو 10 سیکنڈ میں آرام آجاتا ہے۔۔ بغیر درد کے ڈلیوری کیسے ممکن ہے؟ ماہرین کی رائے ہر کسی کے لیے جاننا ضروری ہیں کیونکہ یہ ایک اہم معلومات ہے۔ درد سے تڑپتی حاملہ عورت کو 10 سیکنڈ میں آرام آجاتا ہے۔۔ بغیر درد کے ڈلیوری کیسے ممکن ہے؟ ماہرین کی رائے سے متعلق تفصیلی معلومات آپ کو اس آرٹیکل میں بآسانی مل جائے گی۔ ہمارے پیج پر کھانوں، مصالحوں، ادویات، بیماریوں، فیشن، سیلیبریٹیز، ٹپس اینڈ ٹرکس، ہربلسٹ اور مشہور شیف کی بتائی ہوئی ہر قسم کی ٹپ دستیاب ہے۔ مزید لائف ٹپس، صحت، قدرتی اجزاء اور ماڈرن ریمیڈی کے فوڈز میں موجود ہے۔