آپ کو دل کی بیماری نہیں ہے لیکن کچھ مخصوص علامتیں ظاہر ہونا شروع ہوگئی ہیں تو ہوشیار ہو جائیں

دل کا دورہ آج کل ایک عام بیماری ہوگئی ہے، ہر دوسرا شخص دل کی بیماری میں مبتلا نظر آتا ہے۔ اس کی وجہ ہماری عادات و اطوار، ہمارا طرز زندگی ، ہماری ناقص غذا، دیر سے سونا دیر سے اٹھنا، چہل قدمی کی عادت نہ ہونا، ایک ہی جگہ دیر تک بیٹھے رہنا اور سگریٹ نوشی بھی ہے۔ اکثر اوقات دل کا دورہ لاعلمی یا وقت پر طبی امداد نہ ملنے کے سبب جان لیوا بھی ثابت ہو سکتا ہے۔ یا پھر اکثر اسٹروک کی صورت میں فالج کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے۔ اگر دل کے دورے کے بعد احتیاطی تدابیراختیارنہ کی جائے تو اس سے موت بھی واقع ہوسکتی ہے۔
اگر آپ کو دل کی بیماری نہیں ہے لیکن کچھ مخصوص علامتیں ظاہر ہونا شروع ہوگئی ہیں تو ہوشیار ہو جائیں ،کیونکہ ان علامتوں کا اگلا قدم دل کا دورہ بھی ہو سکتا ہے۔ اسی لئے اگران علامتوں کو جان لیں تو بہتر ہوگا اور اس کی شدت سے بچنے کے لئے صحت مند غذا اور صحت مند عادات کو اپنانا ہوگا۔ اس کے ساتھ ساتھ ڈاکٹر سے بھی رجوع کریں۔ تاکہ وہ آپ کو درست مشورہ دے سکیں۔

ہارٹ اٹیک کی علامات کیا ہو سکتی ہیں؟

سینے میں درد اور تکلیف کا احساس:

اگر آپ کے سینے میں درد اور تکلیف یا گھٹن کا احساس ہورہا ہے تو یہ دل کے دورے کی کافی عام علامتوں میں سے ایک علامت ہے۔ اس میں درد سینے کے وسط میں یا تھوڑا سا دائیں جانب ہوسکتا ہے۔ یہ پٹھوں کے کھچاؤ کی وجہ سے بھی ہوتا ہے۔ /p>

سانس لینے میں دشواری:

دل کے دورے کی صورت میں سانس لینے میں تکلیف ہوتی ہے سینے میں کچھ اٹکنے کا احساس ہوتا ہے ، سانس کھینچ کر لینی پڑتی ہے۔ چکر آتے ہیں۔ لیکن چکر آنا ضروری نہیں ہیں۔/p>

درد کی شدت:

دل کے دورے میں درد کی شدت میں اضافہ ہوتا چلا جاتا ہے۔ یہ درد سینے سے پھیل کر بازو تک پہنچتا ہے اور انگلیوں تک آجاتا ہے، اس کے علاوہ اگر گردن یا جبڑوں میں درد ہے تو بھی دھیان رکھیں کہ یہ درد اگر پھیل کر بازو تک پہنچ رہا ہے تو یہ دل کے دورے کی علامت ہو سکتا ہے۔/p>

بلڈ پریشرمیں کمی یا زیادتی اور بے چینی:

بلڈ پریشر میں اچانک بہت کمی یا بہت زیادتی بھی دل کے دورے کی علامت ہو سکتی ہے۔اس میں چہرے کی رنگت تبدیل ہوجاتی ہے اور نیم غشی طاری ہونے لگتی ہے۔ طبیعت میں بےچینی اورگھبراہٹ پیدا ہوجاتی ہے۔ /p>

دل کی دھڑکن کی بے ترتیبی:

اس میں دل کی دھڑکن میں بےترتیبی آجاتی ہے۔ دل تیز تیز دھڑکنے لگتا ہے۔ سانس لینے میں مشکل ہوتی ہے ۔ چکرآنے لگتے ہیں،یہ تینوں علامات ہوں تو ہارٹ اٹیک کاخطرہ پیدا ہوسکتا ہے۔ /p>

ٹھنڈے پسینے:

اگر سینے میں درد کے ساتھ ٹھنڈے پسینے بھی آنے لگیں تو یہ دل کے دورے کی علامت ہے۔ اس وقت فوری طور پر ہسپتال یا ڈاکٹرسے رجوع کرنے کی اشد ضرورت ہے، ورنہ بڑا نقصان ہوسکتا ہے۔ /p>

احتیاط:

ہم اپنے روزمرہ معمولات اور عادات میں تبدیلی لاکر ہارٹ اٹیک سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔

By Afshan    |    In Health and Fitness   |    0 Comments    |    1498 Views    |    01 Jul 2022

Related Articles

Comments/Ask Question

Read Blog about آپ کو دل کی بیماری نہیں ہے لیکن کچھ مخصوص علامتیں ظاہر ہونا شروع ہوگئی ہیں تو ہوشیار ہو جائیں and health & fitness, step by step recipes, Beauty & skin care and other related topics with sample homemade solution. Here is variety of health benefits, home-based natural remedies. Find (آپ کو دل کی بیماری نہیں ہے لیکن کچھ مخصوص علامتیں ظاہر ہونا شروع ہوگئی ہیں تو ہوشیار ہو جائیں) and how to utilize other natural ingredients to cure diseases, easy recipes, and other information related to food from KFoods.