Ramadan Main Indigestion Se Bachne Ki Tips

کیا آپ کو بھی رمضان میں بدہضمی سے بچنے کے لئے ٹپس کی تلاش ہے؟
امید ہے اس رمضان آپ کانظام ہاضمہ درست طرح سے کام کرنے کے قابل ہوگا۔آپ کے کھانے کی نشاندہی اورجراثیم سے پاک کرکے اسے ہضم کرنے کی ذمہ داری آپ کے نظام ہضم کی ہے۔رمضان المبارک میں نظام ہاضمہ پراضافی بوجھ ہوتاہے۔اس میں تعجب کی کوئی بات نہیں کیونکہ اس مہینے نظام ہضم کے مسائل عام سی بات ہے۔یہ سب مسائل ہماری غذاکے انتخاب اوررفتارکی بدولت ہوتے ہیں۔دن بھربھوکے پیاسے رہنے کے بعد جب شام میں ہم روزہ افطارکرتے ہیں توہم عام طورسے بہت زیادہ اورتیزی سے کھاتے ہیں۔اکثراوقات ہم اپنے کھانے کوٹھیک سے چباتے بھی نہیں ہیں۔رمضان کے دوران ہماری دیسی افطاری کامینیوجوچکنے اورتلے ہوئے کھانے اورچینی سے لبریز مشروبات پرمشتمل ہوتاہے اس سے ہمارے پیٹ کانظام فوری طورپرمتاثرہوجاتاہے۔ایسی صورتحال میں ڈکار،ایسڈ ریفلکس،اپھارہ اوربدہضمی جیسے مسائل عام ہوجاتے ہیں۔رمضان میں تقریباہرکسی کوان مسائل کاسامنارہتاہے۔یہ سب روزہ افطارکرنے کے بعد کھانے کی عادات میں تبدیلی کے سبب ہوتاہے۔
ذیل میں ایچ ٹی وی کی طرف سے رمضان المبارک کے حوالے سے چند ٹپس ہیں جن کی مدد سے آپ اس مبارک مہینے میں بدہضمی سے بچ سکتے ہیں

خوب پیٹ بھر کر کھانے سے گریز کریں
بہت زیادہ اوربہت جلد ی کھاناآپ کے نظام ہضم پردباؤڈا ل سکتاہے۔روزہ افطارکرنے کے بعد عموماًبھوک کے باعث زیادہ کھاناکھایاجاتاہے۔کوشش کریں کہ کھاناآہستہ آہستہ اوراچھی طرح چباکرکھائیں۔اگرآپ فوری طورپربہت زیادہ کھاناکھالیں گے تواس عمل سے آپ کے پیٹ میں بہت ساکھاناچلاجائے گا۔جوگیسٹرک ایسڈ کاسبب بنتاہے اس سے سینے میں جلن کی شکایت ہوتی ہے۔چونکہ ہماراپیٹ گھنٹوں خالی رہتاہے اوراسی وجہ سے ہضم کرنے والے انزائمز بھی اپناکام نہیں کرتے۔
اسی وجہ سے ہضم کاعمل بھی سست ہوجاتاہے۔بہت زیادہ پیٹ بھرکرکھاناصرف درداوربے آرامی کاسبب بنتاہے۔

پانی کا استعمال زیادہ کریں
یادرکھیں روزہ افطارکرنے کے بعد فوری طورپربہت زیادہ پانی پینے سے گریزکریں۔آپ افطارکے وقت ایک گلاس پانی پی سکتے ہیں۔ہلکی پھلکی غذالیں اوراس کے بعد وقفہ دیں۔ہاضمہ کے لئے پانی ضروری ہے۔کھانے کواچھی طرح چبائیں اورآرام سے کھائیں اورآہستہ آہستہ پانی پیئیں۔پانی کےمقدارکو جسم میں بڑھانے کاایک طریقہ یہ بھی ہے کہ وہ پھل جن میں پانی کی وافرمقدارپائی جاتی ہے اپنی غذامیں ان پھلوں کااستعمال کریں جیسے تربوز۔

چکنے، مصالحہ داراور ڈیپ فرائی کھانے کم کریں
جیساکہ اوپربیان کیاگیاہے کہ رمضان المبارک میں ہمارے ہاں زیادہ چکنے اورمیٹھے مشروبات کارواج ہے۔خالی پیٹ زیادہ چکنے کھانے ہمارے نظام ہضم کومتاثرکرتے ہیں اورریفلکس کاسبب بن سکتے ہیں۔مصالحہ دارکھانوں کی وجہ سے بے آرامی اورپیٹ دردکی شکایت ہوسکتی ہے۔اپنے کھانے کی درست منصوبہ بندی کرناضروری ہے۔اپنے دسترخوان پر درست ،صحت بخش اورہلکے کھانوں کاانتخاب ضرور کریں۔

ہلکی پھلکی ورزش کریں
روزمرہ سخت ورزش کرنے کے بجائے افطارکے بعدہلکی پھلکی واک کریں ۔یہ ایسڈ ریفلکس اورسینے کی جلن سے بچنے کابہترین طریقہ ہے۔روزانہ تھوڑی واک اورہلکی پھلکی ورزش ضرورکریں۔

حتمی الفاظ
رمضان المبارک میں کھانے کی عادات کوکنٹرول کرناکبھی کبھارمشکل ہوجاتاہے۔اس سلسلے میں کھانے کی بہتر منصوبہ بندی آپ کی مددکرسکتی ہے۔روزانہ تلی ہوئی اشیاء کے استعمال سے بچیں اوران کی جگہ صحت بخش کھانوں کاانتخاب کریں۔ پانی زیادہ پیئیں مگر آہستہ آہستہ ۔ اس رمضان بدہضمی سے بچنے کے لئے باقاعدگی سے ورزش ضرور کریں۔



Ramadan main indigestion se bachne ki tips

Ramadan main indigestion se bachne ki tips is a very effective recipe that has passed down from generations to generations. The basic meaning of indigestion is an uncomfortable feeling stomach being too full, burning sensation in upper or lower abdomen, and pain. Additionally, if you’re a food lover or are often too stressed, you are most likely to get indigestion a lot in your life. While indigestion can also be caused by other conditions such as poor eating or sleeping habits, overeating can also play an important role. Indigestion, which is also known as dyspepsia causes persistent and consistent pain or discomfort in the upper or lower abdomen. Indigestion is not caused by excessive stomach acid but triggered when you eat. So, make sure to give your eating habits a second thought.

Other symptoms of indigestion may also include, bloating and a feeling of fullness, Nausea and vomiting, Loss of appetite, burning sensation in stomach, heartburn, sudden burping, belching and gas, and acidic taste in mouth.

Do you also find tips to avoid indigestion during Ramadan?

During Ramadan, fasting is important and after iftar the first thing that comes to anyone’s mind is to fill their empty stomach. However, eating too much food at once can cause the digestive system to get shocked. Sudden consumption of too much food confuses the body and thus results in indigestion or other digestive problems. To make it worse, we don’t even drink water between the foods and eat too fast. We don’t even exercise afterwards and eat more after prayer; this makes our stomach unable to cope with the load of digesting. This results in problems like stomach dysfunction, acid reflux, edema, and hemorrhoids are common. There is a problem in almost every case in the month of Ramadan. This is due to the change in food habits after fasting.

The following is a few tips regarding the Ramadan by the HTV that can help you avoid misery in this happy month.

Avoid Eating Too Much, Too Fast
You can eat as much as food possible and your stomach will digest it but only if you take it slow and give your stomach small breaks. Iftar food is more in quantity than the normal diet. Try to slowly your stomach with less appetizers first, then eat a bit, take 5 minutes of break and then proceed to eat slowly. If you are more likely to eat quickly, you will end up stressing your stomach and you will end up getting heart burn due to the overflowing amount of acid. Because your stomach is empty for the fasting hours and digestive enzymes stop working for that reason.
Due to this reason, the digestive process also slows down, which is why eating excessive food can make it difficult for the stomach.

Use Water More
If you are fasting, avoid eating drinking water immediately in large quantities. You can drink a glass of water at the time of breaking fast. Eat nutritious foods in small quantities, drink water and repeat because water is necessary to soften the food to make it easier for your digestive system. Another thing you can do is eat juicy fruits while eating food as fruits contain water in small quantities.

Eat Less Fried Food
It is said that eating lots of fried foods can disturb the digestive process. The oil in the fried food can inhibit the digestive acid production and this will result in the stomach getting upset and stomach pains. It is important to take care of yourself. Please choose the right, healthy and well nutrition for your stomach.

Lightweight exercise
Instead of doing hard work every day; walk a little after your iftar. This is a good way to avoid acid refluxes and nausea symptoms. You should have a little walk and less hardcore of exercise.

Conclusion
The change in food eating habits might change in Ramadan and can be very overwhelming, so while eating, make sure you eat slowly. Avoid eating fried items and choose healthy foods. Drink water more but slowly and regularly exercise in light regimens.
By Aqib Shahzad    |    In Health and Fitness   |    0 Comments    |    1525 Views    |    05 Jun 2018

Comments/Ask Question

Read Blog about Ramadan Main Indigestion Se Bachne Ki Tips and health & fitness, step by step recipes, Beauty & skin care and other related topics with sample homemade solution. Here is variety of health benefits, home-based natural remedies. Find (Ramadan Main Indigestion Se Bachne Ki Tips) and how to utilize other natural ingredients to cure diseases, easy recipes, and other information related to food from KFoods.