کیا شوگر کے مریض آم کھا سکتے ہیں؟ جانیں صحت سے متعلق وہ اہم بات، جو بہت لوگ جاننا چاہتے ہیں

پاکستان میں لاکھوں افراد دائمی حالت ذیابیطس میں مبتلا ہیں۔ جب کہ ٹائپ 1 ذیابیطس آٹومیمون ردعمل کی وجہ سے ہوتی ہے، ٹائپ 2 ذیابیطس مختلف طرز زندگی کی عادات کی وجہ سے ہوتی ہے۔

یہ بیماری خون میں بہت زیادہ شوگر (ہائی بلڈ شوگر لیول) کے نتیجے میں ہوتی ہے جس کی وجہ لبلبہ کافی انسولین پیدا نہیں کر پاتا یا پھر پیدا ہونے والی انسولین کو مؤثر طریقے سے استعمال نہیں کر پاتا۔

زیادہ تر معاملات میں، ذیابیطس کے مریضوں کو اپنی شوگر کی مقدار کم کرنی پڑتی ہے اور ایسی غذائیں کھانے پڑتی ہیں جن کا گلیسیمک انڈیکس کم ہوتا ہے یعنی ایسی غذائیں جو جسم کے خون میں شوگر کی سطح کو نہ بڑھاتی ہوں۔ اگر آپ کو ذیابیطس ہو تو زیادہ تر پھل کھانے سے منع کیا جاتا ہے۔

کیا شوگر کے مریض آم کھا سکتے ہیں؟

گرمیوں کے موسم میں آم کافی نمایاں اور وسیع پیمانے پر دستیاب ہوتے ہیں۔ زیادہ تر لوگوں کا خیال ہے کہ شوگر کی مقدار زیادہ ہونے کی وجہ سے ذیابیطس کے مریض آم نہیں کھا سکتے۔

طب اور ذیابیطس کے ماہر، اپولو کلینکس نے انڈیا ٹوڈے ڈاٹ اِن کو بتایا کہ، "کم مقدار میں آم خون میں شکر کی سطح کو کنٹرول کر سکتے ہیں۔"

ڈاکٹر پلیلا سریکر کرشنا نے کہا کہ، "شوگر کے اچھے کنٹرول والے، شوگر کے مریض کم مقدار میں آم کھا سکتے ہیں اگرچہ آم میں چینی کی مقدار زیادہ ہوتی ہے، لیکن ان میں کاربوہائیڈریٹ بھی کم ہوتے ہیں۔"

آم میں وٹامن ای، کے اور بی کمپلیکس کی کافی مقدار ہوتی ہے اور کیلشیم، پوٹاشیم اور کاپر سمیت فائبر کی مقدار زیادہ ہوتی ہے۔

آم نہ کھانے کا مشورہ:

لیکن ان میں سے بہت زیادہ کھانے سے بلڈ شوگر لیول کو غیر متوازن کیا جا سکتا ہے۔ درحقیقت ڈاکٹر کرشنا نے آم نہ کھانے اور جوس کی شکل میں استعمال نہ کرنے کا مشورہ دیا۔

شوگر کے مریض آم کو اعتدال میں کھائیں۔ انہیں اپنی شوگر لیول کو باقاعدگی سے چیک کرنا چاہیے۔ لیکن انہیں آم کا رس نہیں پینا چاہئے اور صرف آم کو پورے پھل کے طور پر کھانا چاہئے۔

آم کے علاوہ کھائے جانے والے پھل:

ماہرین کے مطابق کچے آم کو دہی یا چاول کے ساتھ کھانے سے جسم میں شوگر کی سطح کو کم کرنے میں مدد ملتی ہے۔

دیگر موسم گرما کے پھل جو ذیابیطس کے مریض باقاعدگی سے کھا سکتے ہیں ان میں امرود، پپیتا، کیوی، ناشپاتی اور کینٹالوپ شامل ہیں۔

Kia Sugar Ke Mareez Aam Kha Sktay Hain

Discover a variety of Health and Fitness articles on our page, including topics like Kia Sugar Ke Mareez Aam Kha Sktay Hain and other health issues. Get detailed insights and practical tips for Kia Sugar Ke Mareez Aam Kha Sktay Hain to help you on your journey to a healthier life. Our easy-to-read content keeps you informed and empowered as you work towards a better lifestyle.

By Salwa  |   In Health and Fitness  |   0 Comments   |   6431 Views   |   11 May 2023
About the Author:

Salwa is a content writer with expertise in publishing news articles with strong academic background. Salwa is dedicated content writer for news and featured content especially food recipes, daily life tips & tricks related topics and currently employed as content writer at kfoods.com.

Related Articles
Top Trending
COMMENTS | ASK QUESTION (Last Updated: 22 May 2024)

کیا شوگر کے مریض آم کھا سکتے ہیں؟ جانیں صحت سے متعلق وہ اہم بات، جو بہت لوگ جاننا چاہتے ہیں

کیا شوگر کے مریض آم کھا سکتے ہیں؟ جانیں صحت سے متعلق وہ اہم بات، جو بہت لوگ جاننا چاہتے ہیں ہر کسی کے لیے جاننا ضروری ہیں کیونکہ یہ ایک اہم معلومات ہے۔ کیا شوگر کے مریض آم کھا سکتے ہیں؟ جانیں صحت سے متعلق وہ اہم بات، جو بہت لوگ جاننا چاہتے ہیں سے متعلق تفصیلی معلومات آپ کو اس آرٹیکل میں بآسانی مل جائے گی۔ ہمارے پیج پر کھانوں، مصالحوں، ادویات، بیماریوں، فیشن، سیلیبریٹیز، ٹپس اینڈ ٹرکس، ہربلسٹ اور مشہور شیف کی بتائی ہوئی ہر قسم کی ٹپ دستیاب ہے۔ مزید لائف ٹپس، صحت، قدرتی اجزاء اور ماڈرن ریمیڈی کے فوڈز میں موجود ہے۔