بچوں کی وہ حرکات جنہیں بدتمیزی نہیں کہا جا سکتا، لیکن والدین ان کو بدتمیزی سمجھتے ہیں

1۔ اگر بچے کچھ کھیل رہے ہیں یا کوئی ایکٹویٹی کر رہے ہیں اور اس سے کچھ شور پیدا ہورہا ہے تو یہ بد تمیزی نہیں ہے اگر آپ کو اس سے کوئی مسئلہ ہے تو پھر اس کا حل بھی آپ کو نکالنا ہوگا کہ ان کے لئے کوئی مخصوص جگہ بنائیں کہ جہاں وہ کھیل سکیں اورآپ کو ڈسٹرب نہ کریں۔
2۔ اگر بچے کھیل رہے ہیں اور اس سے کچھ پھیلاوا ہو رہا ہے تو اس سے بھی گھبرانا نہیں چاہیے کیونکہ اگرہم چاہتے ہیں کہ بچے کچھ اچھا کرنا سیکھیں تو ان کو کچھ گنجائش دینی پڑے گی ۔ لیکن ہم خود ہی چھوٹی چھوٹی باتوں پرجھنجلانے لگتے ہیں کہ یہ تو ہر وقت پھیلاوا کرتا رہتا ہے، گندگی کرتا ہے، ہمارا یہ رویہ بچوں کو ضد دلاتا ہے۔ اور پھر وہ جان بوجھ کے تنگ کرتے ہیں ، لیکن اگر ان کی ان سرگرمیوں میں ہم خود بھی دلچسپی لیں گے تو بچے خوش بھی ہوں گے اور اپنا پھیلاوا سمیٹنے میں بھی آپ کی مدد کریں گے۔
3۔ اگر آپ کا بچہ آپ کو کچھ بتانا چاہتا ہے اور وہ اس کے بارے میں بار بار اس کا تذکرہ کرتا ہے تو آپ اس کو ڈانٹ دیتے ہیں کہ ایک بار بتادیا کافی ہے بار بار تنگ کیوں کر رہے ہو۔ لیکن بچہ اپنی ایکسائٹمنٹ میں اپنے والدین سے بار بار اس چیز کو شئیر کرنا چاہتا ہے۔ یہ بدتمیزی نہیں ہے بلکہ یہ ان کی ایکسائٹمنٹ ہے۔
4۔ بچے اگر کھیل رہے ہیں اور اس میں شورمچا رہے ہیں تو یہ بھی بدتمیزی نہیں ہے۔ بلکہ یہ ان کا جوش و خروش ہے جوان کی خوشی کو ظاہر کررہا ہے۔ انہیں آرام سے سمجھا دیں لیکن اس کے لئے ان کو ڈانٹنا یا مارنا ان کے ساتھ زیادتی ہو گی۔
5۔ بچے اگر اپنی کوئی بات یا موقف آپ کو سمجھانے کی کوشش کر رہے ہیں تویہ بھی بدتمیزی نہیں ہے ، ان کی بات کو سمجھنے کی کوشش کریں اوراگرآپ کو ان کی بات سمجھ میں آتی ہے تو اس کو ماننے میں کوئی حرج نہیں ہے۔ بعض اوقات بچے بھی بڑوں سے زیادہ عقل کی بات کرتے ہیں اس بات کو قبول کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے۔
6۔ اگر آپ کا بچہ کبھی کبھار آپ کی بات ماننے میں کوئی تامل کررہا ہے تو یہ بھی بدتمیزی نہیں ہے۔ اس کی اس حرکت کے پیچھے چھپی وجہ کو سمجھنے کی کوشش کریں کہ اس کی کیا وجہ ہے ۔ اس کے مسئلہ کو سمجھیں شاید وہ آپ کی توجہ چاہ رہا ہو، یا شاید اس کو کوئی پریشانی ہو ۔
7۔ اگر آپ کا بچہ کچھ چڑچڑا ہو رہا ہے تو فوراً الرٹ ہو جائیں کوئی بات ایسی ہے جو اس کو اندر سے مضطرب کررہی ہے اور وہ اس کا اظہار اپنے چڑچڑے پن سے کررہا ہے۔ یا اس کی طبیعت صحیح نہیں ہے۔ یہ اس کی بدتمیزی نہیں ہے۔ یا کوئی اس کو تنگ کررہا ہے، جس کو وہ جواب نہیں دے پارہا اور اس کا غصہ گھر میں نکال رہا ہے۔

By Afshan    |    In Health and Fitness   |    0 Comments    |    1214 Views    |    18 May 2022

Related Articles

Comments/Ask Question

Read Blog about بچوں کی وہ حرکات جنہیں بدتمیزی نہیں کہا جا سکتا، لیکن والدین ان کو بدتمیزی سمجھتے ہیں and health & fitness, step by step recipes, Beauty & skin care and other related topics with sample homemade solution. Here is variety of health benefits, home-based natural remedies. Find (بچوں کی وہ حرکات جنہیں بدتمیزی نہیں کہا جا سکتا، لیکن والدین ان کو بدتمیزی سمجھتے ہیں) and how to utilize other natural ingredients to cure diseases, easy recipes, and other information related to food from KFoods.